Archive - January 28, 2011

1
پتوکی چار مسلح ڈاکوؤں نے ناکہ لگا کر سپروائزر کولوٹ لیا
2
ڈی سی او ملک جہانزیب اعوان کی زیر صدارت ڈسٹرکٹ پرائس کنٹرول کمیٹی کا اجلاس
3
بلیک بیری کا بھارتی حکومت کو ڈیٹا تک رسائی دینے سے انکار

پتوکی چار مسلح ڈاکوؤں نے ناکہ لگا کر سپروائزر کولوٹ لیا

پتوکی﴿میرا پتوکی ڈاٹ کام﴾پتوکی چار مسلح ڈاکوؤں نے ناکہ لگا کر سپروائزر سے 58ہزار نقدی، موبائل فون اور ضروری کاغذات چھین لئے۔ تفصیلات کے مطابق پتوکی ملانوالہ کا رہائشی محمد یٰسین مقامی بنک سے 58ہزار روپے لے کر گھر جا رہا تھا کہ کالج روڈ پر چار نا معلوم مسلح ڈاکو ؤں نے گن پوائنٹ پر اسکی موٹر سائیکل کو روکا اور اس سے 58ہزار نقدی موبائل فون اور ضروری کاغذات چھین لئے۔ تھانہ سٹی پتوکی نے تحریری درخواست پر کارروائی شروع کر دی۔

ڈی سی او ملک جہانزیب اعوان کی زیر صدارت ڈسٹرکٹ پرائس کنٹرول کمیٹی کا اجلاس

قصو ر ﴿میرا پتوکی ڈاٹ کام﴾ڈی سی او قصور ملک جہانزیب اعوان کی زیر صدارت گزشتہ روز ڈی سی او کمی ٹی روم میں ڈسٹرکٹ پرائس کنٹرول کمیٹی کا اجلاس منعقد ہوا ۔اجلاس میں ڈی او آر شجاع قطب بھٹی ‘ڈی او انٹر پرائزر عبدالقدوس طور ‘ڈسٹرکٹ انفارمیشن آفیسر مسز تابندہ امجد ‘ ای ڈی او ہیلتھ ڈاکٹر اسلم رندھاوا ‘ٹی او آر شیخ انور ‘سیکرٹری مارکیٹ کمیٹی ‘ڈپٹی ڈی او مارکیٹ کمیٹی ‘ڈی ڈی او لائیو سٹاک ‘ڈی ایف سی ‘انجمن تاجران کے عہدیداران اور صارفین کی بڑی تعداد نے شرکت کی ۔ ڈی سی او ملک جہانزیب اعوان نے جن اشیائے خوردو نوش کے ریٹ مقرر کئے وہ یہ ہیں ۔ دودھ 40روپے فی کلو‘دہی 45روپے فی کلو ‘آٹا560سے 575روپے فی 20کلو کا تھیلا ‘ باسمتی چاول درجہ اول 72سے 80روپے فی کلو ‘دال چنا 64روپے فی کلو ‘دال مسور97سے 110روپے فی کلو ‘دال ماش 147سے 150روپے فی کلو ‘دال مونگ 120سے 130روپے ‘بیسن 68روپے فی کلو ‘گوشت بڑا 170فی کلو اور چھوٹا گوشت 310روپے فی کلو ‘چینی کے نرخ روزانہ کی بنیاد پر ‘نان 5روپے100گرام اور روٹی100گرام 4روپے مقرر کی گئی ہیں ۔ڈی سی او ملک جہانزیب اعوان نے تاجران سے اپیل کی کہ ملاوٹ سے پاک اور صاف ستھری اشیائ فروخت کریں اور زیادہ سے زیادہ عوام سے تعاون اور منافع کی شرح کم سے کم وصول کریں ۔

بلیک بیری کا بھارتی حکومت کو ڈیٹا تک رسائی دینے سے انکار

بلیک بیر ی موبائیل ٹیلی فون بنانے والے کینیڈا کے ادارے ریسرچ ان موشن نے بھارتی حکومت سے کہا ہے کہ بھارت کے سیکیورٹی اہلکاروں کو کارپوریٹ میل سروس کے ڈیٹا تک رسائی نہیں دی جاسکتی ۔بھارت نے ریسرچ ان موشن کو اس ماہ کے آخر تک ایسا کوئی طریقہ کار وضع کر نے کے لیے کہا تھا جس کے تحت سیکیورٹی فورسزبلیک بیر ی کے ڈیٹا تک رسائی حاصل حاصل کر سکیں وگرنہ اس سروس کو بند کر نا پڑے گا ۔ریسر چ ان موشن کے سنیئر ایگزیکٹورابرٹ کرونے کہا ہے ایسا کوئی طریقہ نہیںنکالا جا سکتا ۔نئی دہلی میں اخبار نویسوں سے گفتگو میں رابرٹ نے کہا ای میل سر وس کی کلید کا رپوریٹ اداروں کی ملکیت ہوتی ہے اس لیے کوئی طر یقہ نہیں نکالا جاسکتا کہ اس تک دوسروں کو رسائی ہو سکے ۔بھارت کا کہنا ہے دہشت گرد اس سروس کی مدد سے کاروائیاں کرسکتے ہیں۔اس ماہ کے شر وع میں یہ اطلاعات آئی تھیں کہ ریسر چ ان موشن نے بھارت کو بلیک بیری کی انسٹنٹ میسجنگ سر وس کو مانیٹر کر نے کاطر یقہ بتا دیا ہے تاہم رابرٹ کرو نے کہا بلیک بیری کی کارپوریٹ ای میل سروس ایک ایسا معاملہ ہے جس کا صنعت کی بنیاد پر حل تلاش کیا جانا چاہیے۔

Copyright © 2017. Powered by Paknewslive