بھارت پسند یدہ ملک کیوں چین کیوں نہیں؟

تحریر : عقیل خان
جب میری نظر پاکستان کی مہنگی ترین وزیر خارجہ حنا ربانی کھر صاحبہ کے بیان پر پڑی تو پڑھ کر بہت عجیب سا لگا کہ ہمارے ملک کی وزیرخارجہ ایک ایسے ملک کو پسندیدہجب میری نظر پاکستان کی مہنگی ترین وزیر خارجہ حنا ربانی کھر صاحبہ کے بیان پر پڑی تو پڑھ کر بہت عجیب سا لگا کہ ہمارے ملک کی وزیرخارجہ ایک ایسے ملک کو پسندیدہ قراردے رہی ہیںجس نے آج تک اس ملک کو دل سے تسلیم ہی نہیں کیا۔ جس نے ہمیشہ ہمارے ملک کو برباد کرنے اور اس کو نقصان پہچانے کے سوا کوئی ایسی بات نہیں کی کہ جس کی وجہ سے ہم اپنی زبان سے خود اس کی تعریف کریں یا اس کو پسندیدہ قرار دیں۔ وزیر خارجہ صاحبہ کے اس بیان کو پڑھنے کے بعد میرے ذہن میں آیا کہ شاید انڈیا نے کشمیر پاکستان کودے دیا پھر سوچا کہ اگر ایسا ہوتا تو پورے ملک میں چھٹی ہوتی اور ہر طرف جشن کا سماں ہوتاپھر خیال آیا کہ شاید امریکہ جو ہمارے ملک کو بربادکرنے پر تُلا ہوا ہے ۔ ہوسکتا ہے کہ انڈیا نے امریکہ کو باور کرایا ہوکہ اگر اس نے پاکستان کی طرف آنکھ بھی اٹھائی تو وہ اور پاکستان ملکر امریکہ کو تہس نہس کردیں گے ۔پریہ سب میرا وہم تھا۔

وزیرخارجہ صاحبہ اگر آ پ بُرا نہ مانیں تو میں یہ پوچھ سکتا ہوں کہ وہ انڈیا جو اپنے ملک کے ایک معمولی سے کرکٹ ٹورنامنٹ میں پاکستانی کھلاڑیوں کو کھیلنے کی اجازت نہیں دے سکتا ۔جو ہر پلیٹ فارم پر پاکستان کی مخالفت کرتا ہے اس میں ہماری وزیر صاحبہ کو کیا نظر آیا کہ وہ سب دشمنی ، سب مخالفتیں اور سب نقصان کو چھوڑ کر اس ملک کو پسندید ہ قرار دیا؟
اگر ملک پسندیدہ قرار دینا ہے تو چین کو دیا جائے ۔ جس نے اس وقت ہمارا ساتھ دیا جب کوئی ہماری طرف ہاتھ بڑھانے کوتیار نہیں تھا۔ ابھی کل کی بات ہے وزیرخارجہ صاحبہ جس وقت امریکہ ہمیںنیست ونابود کی دھمکی دے رہا تھا ، جس وقت ہمارے حکمرانوں کو اے پی سی اور ساری سیاسی رنجشیںبھلا کر ایک میز پر بیٹھا دینے والے کو منہ توڑ جواب دینے کے لیے صرف ایک ملک نے قدم اٹھا یا اور اپنا گھر چھوڑ کر پاکستان میں آکر امریکہ کو جواب دیا کہ میں ’’پاکستان کے ساتھ ہوں‘‘۔شاید اسی وجہ سے امریکہ کو بھی پسپائی کی طرف جانا پڑا۔ آج ہمارے ملک میں جتنا سرمایہ کاری چین نے کی اتنی انڈیا نے نہیں کی۔ آج پاکستان کے 70فیصدعوام کے پاس چائنا موبائل ہیں۔ ہر دکھ میں پاکستان کی مدد چین نے کی ۔ پاکستان کو جنگی سامان میں امداد چائنا دیتا ہے اور پسندیدہ بھارت ہے۔ تمھارے کندھے سے کندھا ملانے کو چین تیار ہے اور پسندیدہ بھارت ہے۔ چین پاکستان کی اس وقت کی اہم ضرورت بجلی پاکستان کو دینے کو تیا ر اور دوسری طرف بھارت پاکستان کا پانی روک کر اس کو تباہ کرنا چاہتا ہے ۔
اگر ہم مسلمان ہیں اور انصاف کے تقاضے پورے کریں تو فیصلہ کرنے میںنا وزیر خارجہ صاحبہ آپ کو اور نہ کسی پاکستانی کو دشواری ہوگی۔

About the author

admin

4 Comments

Leave a comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

You may use these HTML tags and attributes: <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>

Copyright © 2017. Powered by Paknewslive